125

خواجہ آصف نے اپنی نا اہلی کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا

سابق وزیر خارجہ خواجہ آصف نے اپنی نا اہلی کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا جس میں انہوں نے موقف اختیار کیا ہے کہ وہ غیر ارادی طور پر اکاو¿نٹ ظاہر کرنے میں ناکام رہے، بینک اکاؤنٹ میں کل رقم کا اعشاریہ پانچ فیصد بھی موجود نہیں ہے اس لیے قومی اسمبلی کی رکنیت بحال کی جائے۔




مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف کی جانب سے اپنی نااہلی کے اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا گیا ہے ۔ خواجہ آصف نے درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ وہ غیر ارادی طور پر اکاؤنٹ ظاہر کرنے میں ناکام رہے، بینک اکاؤنٹ میں کل رقم کااعشاریہ 5 فیصد بھی موجود نہیں ہے۔


انہوں نے عدالت سے استدعا کی ہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا تاحیات نا اہلی کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے اور قومی اسمبلی کی رکنیت ختم کرنے کا الیکشن کمیشن کا نوٹیفکیشن ختم کیا جائے۔خیال رہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے کچھ روز پہلے تحریک انصاف کے رہنما عثمان ڈار کی درخواست پر خواجہ آصف کو تاحیات نا اہل قرار دیا تھا۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے تین رکنی لارجر بینچ نے متفقہ طور پر خواجہ آصف کے خلاف فیصلہ دیا تھا۔ ہائی کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد خواجہ آصف نے سپریم کورٹ جانے کا اعلان کیا تھا


اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں