128

بھارتی وزیر کی نوجوان لڑکی کے ساتھ جنسی زیادتی،





بھارتی ریاست اتر پردیش میں حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے رکن اسمبلی کلدیب سینگر نے ایک 18 سالہ لڑکی کو اجتماعی درندگی کا نشانہ بنایا جس کے بعد لڑکی کے والد کو پولیس نے حراست میں لے لیا اور شدید تشدد کا نشانہ بنا کر قتل کردیا۔ پولیس کی جانب سے رکن اسمبلی کے خلاف کسی قسم کی کارروائی نہیں کی گئی ، ڈی جی پی اتر پردیش کا کہنا ہے کہ کلدیپ سینگر کی گرفتاری کا فیصلہ سی بی آئی کرے گی




بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست یوپی کے ضلع اناﺅ میں ایک لڑکی کو حکمران جماعت کے ایم ایل اے کلدیپ سینگر نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا۔ بچی کے ساتھ ہونے والی زیادتی کی شکایت کی گئی تو پولیس نے متاثرہ لڑکی کے والد کو حراست میں لے لیا اور اس پر شدید تشدد کیا جس کے نتیجے میں وہ ہسپتال پہنچنے سے پہلے ہی دم توڑ گیا۔



اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں